امریکی ریاست کیلی فورنیا میں خالصتان کے قیام کیلئے ریفرنڈم کا انعقاد

چہرہ ڈیسک چہرہ ڈیسک

امریکی ریاست کیلی فورنیا میں خالصتان کے قیام کیلئے ریفرنڈم کا انعقاد

امریکی ریاست کیلی فورنیا میں خالصتان کے قیام کیلئے ریفرنڈم کا انعقاد

خالصتان کے قیام کیلئے ووٹنگ کا دوسرا مرحلہ مکمل،  2 لاکھ سکھوں نے ووٹ ڈالا

 ریفرنڈم کے پہلے مرحلے میں ایک لاکھ 27 ہزار اور دوسرے مرحلے میں 60 ہزار ووٹ پڑے

ریفرنڈم  کے دوران سکھوں کی حفاظت کیلئے امریکی پولیس کے علاوہ اسنائپرز بھی موجود رہے

ووٹنگ کا پہلا مرحلہ گرپتونت سنگھ پنوں کے قتل کی سازش کے چند ہفتوں بعد ہی منعقد ہواتھا

 پہلے مرحلے میں ووٹ ڈالنے سے محروم رہ جانے سکھوں کو ووٹ ڈالنے کا موقع فراہم کیا گیا تھا

پہلے مرحلے میں وقت ختم ہوجانے کے سبب کئی ہزار سکھ اپنا ووٹ نہیں ڈال سکے تھے

کیلی فورنیا میں ریفرنڈم  پر  ووٹنگ کے آغاز سے قبل 20 ہزار سکھ قطار  میں کھڑے تھے

ہزاروں سکھ تمام دن سینٹر میں موجود رہے، بھارت کے خلاف نعرے بازی

سکھ فار جسٹس کے زیر اہتمام ریفرنڈم پر ووٹنگِ سینٹر کا نام بھی شہید جتھے دار کانکے رکھا گیا تھا گرپتونت سنگھ کا کہناہےکہ

شہید کانکے نے سکھوں کو حق خودارادیت دلانے کیلئے انتھک محنت کی، پنوں

شہید کانکے کے راستے پر چلتے ہوئے آزادی حاصل کریں گے،

ہم جمہوری طریقے سے نریندر مودی کی سیاسی موت چاہتے ہیں،